آئل ریفائنری پاکستان میں معاہدوں کے اختیارات وزراءکو تفویض۔ تازہ ترین خبریں

ریاض ۔۔۔۔ سعودی کابینہ کا اجلاس منگل کو خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی زیر نگرانی ہوا۔ یادداشتوں کا اختیار وزیر توانائی اور صنعت اور معدنیا اس کے بموجب خالد الفلاح پاکستان کیس مذکورہ شعبوں میں مفید یادداشتوں کو جاری رکھنے کے لیے منطقی انجام تک پہنچیں گے۔ کابینہ نے عجائب گھروں اور آثار قدیمہ کے امور کے شعبوں میں پاکستان کے ساتھ تعاون کی مفید یادداشت اختیار کی ہے۔ کابینہ نے منگل کی صبح 17 گھنٹے میں۔ سعودی وزیر اطلاعات و نشریات ترکی کے بعد سعودی پریس ایجنسی کو بتاتے ہیں کہ کابینہ سعودی عرب ، ہندوستانی رابطہ کونسل کا دستخط اختیار کرتی ہے ، نائب صدر اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان کو تفویض کیا۔ کابینہ نے رابطہ کونسل کے انتظامی ڈھانچے کی منظوری کا اختیار بھی انا کو سپرد کردیا۔ ولی فقیہ مذکورہ کونسل سعودی عرب کے سربراہ ہیں۔ کابینہ نے ہندوستانی نشریاتی تنظیموں اور سعودی ٹی وی اتھارٹی کے درمیان ریڈیو ٹی وی نشریات کے شعبوں میں دستخط کے اختیارات کے بارے میں معلومات کا ذکر کیا ہے۔ مفید یادداشت کے لیے دستخط کا اختیار کی مفید یادداشت سیاحت اور قومی آثار کے سربراہ کو اختیار دیا گیا۔ کابینہ نے چین کی سطح کو مشترکہ قرار دیا ہے ، کیسٹ میڈیکل انشورنس ، مالیاتی اداروں کی نگرانی ، چین کیساتھ رکاو سے آزاد تجارت اور چینی زبان کو اساتذہ فراہم کرنے اور انڈونیشیا کے ساتھ انفارمیشن اور کمیونیکیشن کے اختیارات بھی تفویض کیے گئے ہیں۔ صبح کے شروع ہونے والے شاہ سلمان نے البانیہ کے ساتھ اپنے دن کے نتائج کے ساتھ کابینہ کو آگا کیا ہے جبکہ کابینہ مسجد الحرام کی تیسری سعودی توحید کے لیے سعودی عرب کے ولی عہد اور مشاعر مقدسہ اور مقام حج کے لیے خادم ہیں۔ حرمین شریفین اور انکی ولی زندگی کی بات دونوں پر قدرو منزلت کا معاملہ کیا ہے۔






#آئل #ریفائنری #پاکستان #میں #معاہدوں #کے #اختیارات #وزراءکو #تفویض

اپنا تبصرہ بھیجیں