چینی خاتون کا مسلسل 40 سال جاگنے کا دعویٰ، ڈاکٹرز بھی حیران

سونا فطری عمل ہے، ہم میں سے اکثر لوگ مسلسل چوبی گھنٹے نہیں جاگ سکتے کیونکہ مسلسل جاگنے کے نیتجے میں نیند کے باعث آنکھیں بند ہونے لگتی ہیں۔

چین میں ایک خاتون نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ مسلسل چالیس سال سے جاگ رہی ہے جبکہ اس دوران وہ ذرا بھی نہیں سوئی، خاتون کا تعلق چین کے صوبے ہینان سے ہے، جین ہیہی کا کہنا ہے کہ وہ دس یا پندرہ دن نہیں بلکہ مسلسل چالیس سال سے جاگ رہی ہیں۔

لی کے بارے میں بتایا جارہا ہے کہ وہ آخری بار چار یا پانچ سال کی عمر میں سوئی تھیں، لی جین ہیہی کے پڑوسیوں نے بھی اس بات کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ انہوں نے لی کے جاگنے سے متعلق باقاعدہ مشاہدہ بھی کیا ہے۔

اس حیرت انگیز خاصیت سے متعلق ان کے شوہر نے بھی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ انہوں نے اپنی اہلیہ کو نیند کی دوائیں بھی لاکر دیں لیکن وہ بھی ان پر اثر نہیں کرتیں، اپنی اس منفرد خاصیت سے تنگ لی متعدد ڈاکٹرز سے رائے بھی لے چکی ہیں۔

دوسری جانب ڈاکٹرز نے نیند کے اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے انہیں اڑتالیس گھنٹوں کے لیے مشاہدے میں رکھا، تو انہیں مانیٹرنگ سینسر پر چونکا دینے والی معلومات ملیں، ڈاکٹرز نے اپنے مشاہدے میں کہا کہ لی جین سوتی ضرور ہیں لیکن وہ عام انسانوں کی طرح نہیں سوتیں۔

ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ خاتون جب سوتی ہیں تو ان کی نہ صرف آنکھیں کھلی رہتی ہیں، بلکہ وہ اس دوران اپنے شوہر سے باتیں بھی کرتی رہتی ہیں، ڈاکٹرز نے ان کی اس خاصیت کو ’جاگتے ہوئے سونا‘ قرار دیا اور کہا کہ یہ بالکل اسی طرح ہے جس طرح کہ لوگ نیند میں باتیں کرتے ہیں اور حتیٰ کہ چل پھر بھی لیتے ہیں۔

Comments






#چینی #خاتون #کا #مسلسل #سال #جاگنے #کا #دعوی #ڈاکٹرز #بھی #حیران

اپنا تبصرہ بھیجیں